دو روز گلستان دہرمیں گزار کے   ہم جارہے ہیں بازئ اعمال ہار کے
ارض و سماء دشت و گلستان مہر و ماہ آثار ہیں یہ قدرت پروردگار کے
گُل مسکرا رہے ہیں عنادل ہیں نغمہ سنج پیچھےلگی ہوئی ہے خزاں بھی بہار کے
عبدالرحمن عاجز
1978
  • اگست
  • ستمبر
ہماری فرمائش پر جناب احسان دانش نے 'محدث' کے 'رسولِ مقبول ﷺ نمبر' کے لئے خصوصی نعت عطا کرنے کا وعدہ فرمایا اور وہ وعدہ یوں ایفاء ہوا کہ ایک طویل ترین نعت صرف قلب و ذہن سے گوہرِ تاب دار بن کر وجود میں آئی۔ کاش کاغذ کی کم یابی و گرانی ہمارے آڑے نہ آتی اور ہم اس شاہکار کو مکمل صورت میں قارئینِ محدّث کی خدمت میں پیش کرنے کی سعادت حاصل کرتے۔
احسان دانش
1973
  • مئی
  • جون
نغمہ زا سازِ ثنا پاتا ہوں     وجد میں ارض و سما پاتا ہوں
معنیٔ لفظ و بیاں آتے ہیں     ہم نوا روحِ نوا پاتا ہوں
والئی کشورِ جاں آتے ہیں    سرِ تسلیم جھکا پاتا ہوں
حفیظ تائب
1973
  • مئی
  • جون
معاشرے کی خدا جانے کیسے ہو تشکیل
بپا ہے چارون طرف خوب صورِ اسرافیل
ہر ایک دست و گریباں ہے آج آپس میں
فضل روپڑی
1987
  • نومبر
مدینہ ریارِ رسول (صلی اللہ علیہ وسلم)، اللہ اللہ
یہاں رحمتوں کا نزول اللہ اللہ
پیغمبر (صلی اللہ علیہ وسلم) تھے علم اور حکمت میں یکتا
فضل روپڑی
1988
  • مارچ
  • اپریل
تابندہ جس کی ضو سے ہے ایوانِ شش جہات         ''وہ کائنات حسن ہے یا حسنِ کائنات''
وہ جس کا لفظ لفظ حقیقت کا ترجمان          وہ جس کی بات بات میں شیرینیٔ نبات
اقوال جس ک شرح کتابٔ مبین اور         افعال جس کے معنیٔ آیاتِ بیّنات
منظور احسن عباسی
1976
  • مئی
تابندہ جس کی ضو سے ہے ایوانِ شش جہات  ''وہ کائنات حسن ہے یا حسنِ کائنات''
وہ جس کا لفظ لفظ حقیقت کا ترجمان وہ جس کی بات بات میں شیرینیٔ نبات
اقوال جس ک شرح کتابٔ مبین اور افعال جس کے معنیٔ آیاتِ بیّنات
منظور احسن عباسی
1978
  • جولائی
زبور میں نام ِ دلنواز حضور صلی اللہ علیہ وسلم ہے"حاط حاطؐ"خالد !
معہ ستارہ ہیں جس طرح آسماں کے لئے
ہجوم لالہ وگل صحن گلستان کے لئے
عبدالعزیز خالد
1984
  • جولائی
کلام حق کی وضاحت حدیث ختم رسل ؐ!
چراغِ راہِ شریعت حدیث ختم رسلؐ!
حسین طرز تکلم ،دھنک دھنک جملے
راسخ عرفانی
1984
  • اگست
لحظہ لحظہ راحت جاں ہو لا الٰہ الا اللہ
قلب کے ہر گوشے میں نہاں ہو لا الٰہ الا اللہ
جسم کے ٹکڑے سے عیاں ہو لا الٰہ الا اللہ
اے میرے آقا میں جسدم جام شہادت پی جاؤں
خون کے ہر قطے کی زبان ہو لا الٰہ الا اللہ
لا الٰہ الا اللہ پر  روح وبدنی تک مٹ جائیں
عبدالرحمن عاجز
1990
  • مئی
صفات ِ محمدؐ ثنائے محمدؐ         ہے شرح کلام خدائے محمدؐ
خدا خود سلام آپؐ پر بھیجتا ہے        خدا خود ہے مدحت سرائے محمدؐ
مُحبِ محمدؐ حبیب ِخدا ہے          رضائے خدا ہے رضائے محمدؐ
عبدالرحمن عاجز
1976
  • اگست
فضا دلکش ہے کیف آور سماں ہے
جبیں میری ہے، تیرا آستاں ہے
زمیں کے ذرے گردُوں کے ستارے
عبدالرحمن عاجز
1984
  • اکتوبر
ہر اک لب پہ ہے گفتگوئے محمد ﷺ          ہر اک دل میں ہے آرزوئے محمد ﷺ
فرشتوں میں پائی نہ انساں میں دیکھی                 جہاں سے نرالی ہے خوئے محمد ﷺ
گرفتار جن کی ہے جانِ دو عالم               وہ ہیں گیسوئے مشکبوئے محمد ﷺ
عبدالرحمن عاجز
1973
  • مئی
  • جون
منبع صدق و صفا ہے سنّت خیرالانام
چشمہ رُشد و ھدیٰ ہے سنّت خیرالانام
زندگی کا راستہ ہے سنّت خیرالانام
راز کاشمیری
1978
  • مارچ
  • اپریل
دیا اپنے غلاموں کو شکوہِ قیصری تُو نے       کیا شاہوں کو آگاہِ مقامِ بندگی تُو نے
سکھائے تُو نے محکوموں کو آداب جہانبانی       مرے آقا ﷺ بدل ڈالا مزاج خسروی تُو نے
تو آیا باغِ عالم کے لئے ابرِ کرم بن کر      چمن زارِ محبت کو عطا کی تازگیُو نے
طاہر شادانی
1973
  • مئی
  • جون
عقل ہے دیوانہ محبوب رب العالمین            ہوش ہے وارفتہ انفاس ختم المرسلین
سیرت خیر البشر آیات قرآن مجید        نقش پائے رہبر عالم ہدی للمتقین
ذکر و فکر سرور کونین عیش دو جہاں           الفت شاہ دو عالم دولت دنیا و دیں
منظور احسن عباسی
1975
  • نومبر
  • دسمبر
نقش ہو دل پر نقشۂ احمﷺ
لب پہ ہو جاری نغمۂ احمدﷺ
کب سے ہے پنہاں، دل میں یہ ارماں، رحمتِ یزداں سے ہو نمایاں
عبدالرحمن عاجز
1971
  • اپریل
دل بنا جلوہ گہ حسن شہنشاہؐ زمن!                    نکہت افروز ہوا رحمت حق کا گلشن
مصطفےٰؐ جس کے زروسیم ہیں مخزن مخزن        جس کے یاقوت اہرملیں معدن معدن
ہے وہی نام سکوں بخش ومسرت انگیز           تیز ہوجاتی ہے اس نام سے دل کی دھڑکن
نطق بے باک سنبھل اپنی حقیقت پہچان    کون ہے جس کو کہ ہے نعت میں یا رائے سخن
یہ قصیدہ نہیں شاہوں کا بقول عرفی                     ہے دم  تیغ پہ یہ راہ یہ  صحرا ہے نہ بن!
علیم ناصری
1985
  • مارچ
دکھا دے خواب میں یارب کبھی صورت محمدؐ کی ..... بہت مدت ہوئی سہتے ہوئے فرفت محمدؑ کی
کوئی انسان کیا جانے ہے کیا عظمت محمدؐ کی ..... محمدؐ کا خدا کرتا ہے خود مدحت محمدؐ کی
نہیں ثانی کوئی دونوں جہاں میں جس کی رفعت کا ..... خدا کے بعد وہ ہستی ہےبس حضرت محمدؐ کی
عبدالرحمن عاجز
1978
  • فروری
نہیں میں اکیلا جہان میں میرے ساتھ میرا خدا بھی ہے
یہ خدا کا خاص کرم بھی ہے میرے محسنوں کی دعا ء بھی ہے

تری رحمتوں کا بھی شکریہ میرے مولا میں نے کیا بھی ہے
کبھی بھول چوک بھی ہوگئی کبھی دھوکا مجھ کو لگا بھی ہے
فضل روپڑی
1987
  • جولائی
ہے نامِ محمد ؐ سے عیاں شانِ محمدؐ      جو شانِ محمدؐ ہے وہ شایانِ محمدؐ
شاہانِ زمانہ کی حقیقت کو نہ پوچھو      شاہانِ زمانہ ہیں غلامانِ محمدؐ
ہوتا ہے رَفَعْنَا لَکَ ذِکْرَک سے یہ ثابت     خود ربّ محمدؐہے ثنائ خوانِ محمدؐ
عبدالرحمن عاجز
1971
  • مئی
اُنہیں شامل تو کرلوں داستاں میں
یہ مشکل ہے کہاں وہ اور کہاں میں

تکلف برطرف یہ بات سچ ........ ہے
نہیں ہوں نعت کے شایان شاں میں
اسرار احمد سہاروی
1986
  • مئی
صورت میں بشر، سیرت میں ملک            اک فرش نشیں اور زیب فلک
اس رُخ کی ضیا کا کیا کہنا                   ماتھے سے خجل ہیرے کی دُلک
چہرے سے چاند بھی شرمائے               سُورج دیکھے تو جائے ڈھلک
خالد بزمی
1976
  • جولائی
تیرے دیوانے جو طیبہ کی جناں سے گزرے
روحِ بیتاب پکاری "یہ کہاں سے گزرے"
منزلِ شوق میں ہم سود و زیاں سے گزرے
اسرار احمد سہاروی
1985
  • جنوری