ڈاونلوڈ

آن لائن مطالعہ

آن لائن مطالعہ
  • نومبر
2019
حسن مدنی
مسلم حکومت کا اوّلین مقصد اللہ تعالیٰ کی بندگی وطاعت کوفروغ دینا اور کلمۃ اللہ کی سربلندی کی جدوجہد کرنا ہے جیسا کہ سورۃ الحج :41میں مسلم حکومت کے مقاصد میں صلوٰۃ وزکوۃ کی اقامت کرنا اور اللہ کے بتاے ہوئے معروف کو جاری اور منکرات کا خاتمہ کرنا شامل ہے۔ اسی طرح نبی کریمﷺ نے یمن میں جب اپنے حاکم سیدنا معاذ﷜ کو بھیجا تو ان کو سب سے پہلے کلمہ توحید کے فروغ کی تلقین کی ۔ پاکستان کا مقصد بھی بانی پاکستان کی زبانی ’دور حاضر میں اسلامی حکومت کا قیام‘ ہے اور دستورِ پاکستان میں بھی قراردادمقاصد کا مؤثر حصہ اس کی تاکید اور مستقل قانونی بنیاد فراہم کرتا ہے۔موجودہ حکومت بھی ریاستِ مدینہ کے قیام کی مسلسل تکرار کرتی رہتی ہے۔
  • نومبر
2019
شیخ ابراہیم بن سلیمان الفہید
نئے کفریہ معابد کی تعمیر
1) أجمع الفقهاء على تحريم إحداث معابد للكفار في البلاد التي أسلَم أهلها عليها قبل الفتح الإسلامي؛ كالمدينة واليمن، أو التي أحدَثها المسلمون؛ كالبصرة، وبغداد، أو في بلاد شبه الجزيرة العربية، ولا يجوز مصالحةُ أهل الذِّمة على إحداث معبدٍ لهم في هذه البلاد، ويجب هدم كلِّ معبدٍ مُحْدَثٍ فيها.
  • نومبر
2019
ڈاکٹر حافظ محمد شریف شاکر
      سید الحفاظ والاثبات سیدنا ابوہریرۃدوسی یمنی﷜ کے نام کے بارے میں امام ذہبی﷫ لکھتے ہیں:
اختلف فى اسمه على أقوال جمة، أرجحها: عبدالرحمٰن بن صخر.
’’ابوہریرہ﷜ کے نام کے بارے میں بہت سے مختلف اقوال ہیں۔ ان میں سب سے راجح عبدالرحمٰن بن صخر ہے۔‘‘
  • نومبر
2019
ثمرہ شفیق
سنکیانگ یا شنجیانگ (انگریزی:Xinjiang، چینی:新疆،ایغور: شىنجاڭ) عوامی جمہوریۂ چین کا ایک خود مختار علاقہ ہے۔ یہ ایک وسیع علاقہ ہے تاہم اس کی آبادی بہت کم ہے۔ سنکیانگ کی سرحدیں جنوب میں تبت ، جنوب مشرق میں چنگھائی اور گانسو کے صوبوں، مشرق میں منگولیا، شمال میں روس اور مغرب میں قازقستان، کرغزستان، تاجکستان، افغانستان اور پاکستان اور مقبوضہ کشمیر سے ملتی ہیں۔
  • نومبر
2019
صہیب حسن
یہ سنہ 1971ء کے بعد کی بات ہے! ...اور اس دور کی جب میں نیروبی میں مقیم تھا اور سال بسال والدین اور بہن بھائیوں سے ملاقات کے لیے کبھی مدینہ منورہ اور کبھی کراچی آتا جاتا رہتا ۔ ابا جان (مو لانا عبد الغفار حسن) سے معلوم ہوا کہ کراچی کے ایک نواحی بستی میں صغیر احمد کے نام سے ایک اہل حدیث عالم تازہ تازہ وارد ہوئے ہیں۔ گو وہ آئے تو ہندو ستان سے تھے لیکن سقوطِ ڈھاکہ کے بعد پاکستان وہندوستان میں ڈائریکٹ مواصلات منقطع ہونے کی وجہ سے وہ کراچی پہنچ گئے
  • نومبر
2019
ابتسام الہی ظہیر
گزشتہ چند دنوں کے دوران مجھے دو پر وقار تقاریب میں شرکت کا موقع میسر آیا۔ پہلی تقریب جامعہ لاہورالاسلامیہ کے امتحانی نتائج کے موقع پر لاہور کے سفاری پارک میں منعقد ہوئی۔ اہم مدارسِ دینیہ جہاں پر اسلامی تعلیم وتربیت کا اچھے طریقے سے اہتمام کرتے ہیں، وہیں پر ان میں غیر نصابی سرگرمیوں کی بھی حوصلہ افزائی کی جاتی ہے۔ جامعہ لاہور الاسلامیہ، لاہور کا ایک منظّم او ر معیاری ادارہ ہے۔ جامعہ کے مہتمم ڈاکٹر حافظ حسن مدنی اور ڈاکٹر حافظ حمزہ مدنی علمی ذوق رکھنے والے نوجوان ہیں، جو اپنے والد گرامی مولانا ڈاکٹر حافظ عبدالرحمٰن مدنی ﷾ کی نگرانی میں جامعہ ہذا کے اُمور چلاتے ہیں۔