ڈاونلوڈ

آن لائن مطالعہ

آن لائن مطالعہ
  • مارچ
1986
ابو حبیب
حضرت آدمؑ سے لے کر حضرت محمد رسول اللہ ﷺتک اللہ کا دین ''اسلام'' ہی رہا ہے او راللہ تعالیٰ ہی نے اس کے ماننے والوں کانام مسلمان رکھا ہے۔ إِنَّ الدّينَ عِندَ اللَّـهِ الإِسلـٰمُ ۔۔۔هُوَ سَمّىٰكُمُ المُسلِمينَ لیکن اس ارشاد کا یہ مطلب قطعاً نہیں کہ اس دین کے نام لیواؤں کو کسی اور وصفی نام سے پکارنا منع ہے۔ کیونکہ قرآن و حدیث میں مختلف مناسبتوں سے انبیاؑء او ران کی امتوں کو دوسرے ناموں سے بھی پکارا گیا ہے۔ جیساکہ زیر نظر
  • مارچ
1986
مسرت بیگم
پردہ اٹھا تو حسِ شرافت کہاں رہی؟
دین محمدی سے محبت کہاں رہی؟

آزاد ملک ہوگیا آزاد بی بیاں
قرآن اور حدیث سے نسبت کہاں رہی؟
  • مارچ
1986
غازی عزیر
عمرو بن شعیب اپنے والد سے اور وہ ان کے دادا سے روایت کرتے ہیں:''ان النبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم امر بتسمیۃ المولود یوم سابعہ ووضع الاذٰی عنہ والعق''''نبی ﷺ نے مولود کا نام اس کے ساتویں دن رکھنے، اس کی تکلیف دور کرنے اور عقیقہ کرنے کا حکم فرمایا''اس حدیث کو شارح صحیح مسلم امام نووی  نے اپنی مشہور کتاب ''الاذکار'' او رامام ابن تیمیہ نے ''صحیح الکلام الطیب'' میں بھی نقل کیا ہے۔بعض دوسری احادیث میں بھی
  • مارچ
1986
طیب شاہین لودھی
''اگر کوئی مسلمان اللہ تعالیٰ یا کسی نبی کو گالی دے تو یہ رسول اللہ ﷺ کی تکذیب ہے۔ آپؐ کی تکذیب کفر و ارتداد ہے۔ ایسے شخص سے توبہ کروائی جائے اور اگر وہ توبہ نہ کرے تو اسے قتل کردیا جائے اور اگر کوئی ذمی کھلے عام، اعلانیہ، اللہ تعالیٰ یا کسی نبی کو گالی دیتا ہے تو یہ عہد شکنی ہے، لہٰذا اسے قتل کرو۔''
  • مارچ
1986
اکرام اللہ ساجد
یوں تو افسوسناک واقعات و حوادث اس ملک میں روز مّرہ کا معمول بن گئے ہیں، لیکن 13 فروری 1986ء کو لاہو رمیں جو حادثہ رونما ہوا، اس نے ملک کے اسلام پسند طبقہ کو بجا طور پر یہ سوچنے پر مجبور کردیا ہے کہ اسلام کے نام پر قائم ہونے والے اس ملک میں خود اسلام کامستقبل کیا ہوگا؟ کھلے سر اور کھلے چہروں کے ساتھ، (اور ماسوائے معدودے چند) دوپٹے سے بے نیاز کچھ ''خواتین'' نے، جنہیں خواتین کہنا خودخواتین کی بھی توہین ہے،
  • مارچ
1986
عبدالرحمن عاجز
سب اہل حشر انہیں اشکبار دیکھیں گے
سروں پر جن کے گناہوں کے بار دیکھیں گے

نہ جانے حال دل بے قرار کیا ہوگا
نظر کے سامنے جب کوئے یار دیکھیں گے