3

میرے پسندیدہ۔۔

اس صفحہ کو پسند کرنے کے لیے لاگ ان کریں۔
Powered By JFBConnect

کتنی چیزیں ہیں کہ اُن سے ہمیں نفرت ہے بہت
اور کوئے یار میں اُن چیزوں کی وقعت ہے بہت

محفل عقل میں ہے طنعہ زنی ہم پہ، تو کیا
کوچہ عشق میں دیوانوں کی عزت ہے بہت

پھر نہیں پلٹا جو اک روز گیا پی کے ادھار
ویسے واعظ کے امیں ہونے کی شہرت ہے بہت

اک سبب ہے ، جو ملاقات ہے گاہے گاہے
ورنہ دل میں بخدا ان کی محبت ہے بہت

دست گلچیں کے مظالم کو سمجھنے کے لیے
چند مسلے ہوئے پھولوں کی شہادت ہے بہت

نفس باد صبا سرد رکھے ہے ورنہ
سینہ ہائے گل و لالہ میں حرارت ہے بہت