• اپریل
1971
عبدالغفور رمضان پوری
ایک صورتِ ایتلاف!

اصل دین کہ جب حضور علیہ الصلوٰۃ والسلام کا ارشاد سامنے آتا ہے تو مسلمان لومۃ لائم سے بے نیاز ہو کر اس کے سامنے جھک جائے، اسلاف اور بزرگوں کا یہی طریقہ تھا۔ مندرجہ بالا مضمون یعنی مفید الأحناف اِسی سلسلے کی ایک کڑی ہے، جس میں مصنف نے ثابت کیا ہے
  • اگست
1971
عبدالغفور رمضان پوری
سوال:

آمین بالجہر کسی کتاب فقہ مذہب حنفی سے ثابت ہے یا نہ۔

جواب:

ثابت ہے۔ امام ابن الہمامؒ نے فتح القدیر میں لکھا ہے:۔

«ولو کان إلی فی ھذا شئ لو فقت بأن روایة ألخفض یراہ بھا عدم القرع العنیف وروایة الجھر بمعنی قولھا فی زیر الصت وذیلھا اٰه»
  • ستمبر
1971
عبدالغفور رمضان پوری
سوال:

ایک مثل ہونے سے وقتِ ظہر گزر کر وقتِ نماز عصر ہو جاتا ہے یا نہ؟

جواب:

صاحبین کے نزدیک ہو جاتا ہے اور یہی مفتی بہ ہے۔ نقع المفتی والسائل میں مولانا محمد عبد الحیؒ تحریر فرماتے ہیں:
  • اکتوبر
1971
عبدالغفور رمضان پوری
سوال:

رفع یدین سے نماز فاسد ہوتی ہے یا نہیں؟

جواب:

نہیں۔ ردّ المحتار ص ۶۸۴ میں ہے: