• جون
2019
سرحان عادل سرحان
دورِحاضر میں کوئی بھی فتویٰ آپ کی نظر سے گزرے تو اس میں آپ کو بکثرت امام ابن تیمیہ ( م 728ھ) کے اقوال سے استدلال پڑھنے کو ملے گا۔ حقیقت یہ ہے کہ امام ابن تیمیہ﷫ پر اغیار کی بجائے اپنوں نے زیادہ مظالم ڈھائے ہیں۔ ان کی علمی آرا سے غلط استدلالات کیے گئے۔ ان میں زمان و مکان کی تفریق پیش نظر نہ رکھی گئی ہے۔ قدیم وجدید اَدوار کا خیال نہ کیا گیا۔ حالانکہ ابن تیمیہ ایک صاحبِ کمال شخصیت تھے۔ تمام علومِ شریعہ کی گہرائی میں اُتر گئےتھے۔ ہر فن پر کمالِ مہارت کے ساتھ کلام کیا۔ یونانی منطق و فلسفہ میں لازوال درک حاصل کیا۔