• مارچ
1971
ادارہ
اذان ''تأذین'' (باب تفعیل) کا حاصل مصدر ہے جس کے معنی ''اعلان'' کے ہیں۔ نمازوں کے لئے جو اذان کہی جاتی ہے۔ اس سے بھی مقصد اعلان ہی ہے۔ لیکن شریعت میں جو کام دوسری عبادات کا وسیلہ ہیں وہ خود بھی عبادت ہیں جن پر ثواب ملتا ہے جیسا کہ وضو وغیرہ۔ اس لئے اگر اعلان کے لئے الفاظِ مسنونہ کی بجائے دوسرے طریقے اختیار کئے جائیں تو وہ عبادت نہ ہوں گے
  • دسمبر
1999
شفیق کوکب
فکرو نظر:۔
ارشاد الحق اثری مولانا ۔دینی تعلیم و تحقیق اور عصری تقاضےدسمبر98،2تا6۔
صلاح الدین یوسف حافظ ۔المیہ کارگل کااسلامی حل!اگست 99،2تا8۔
صلاح الدین یوسف حافظ۔افغانستان سوڈان پر امریکی جارحیت طالبان کوگزارشات،ستمبر98۔2تا5۔
صلاح الدین یوسف حافظ۔تحریک نفاذ  شریعت محمدی مالاکنڈڈویژن،فروری 99۔2تا7۔
صلاح الدین یوسف حافظ ۔دینی مدارس مقاصد اور پس منظر خدمات مئی 95۔2تا9۔
صلاح الدین یوسف حافظ۔عالم اسلم کو درپیش سنگین مسائل ،جنوری99۔2تا3۔
صلاح الدین یوسف حافظ۔مدارس دینیہ غلط فہمیوں اور شبہات کا ازالہ ،جولائی95۔2تا10۔
صفی الرحمٰن مباکپوری مولانا۔ر مضان کا مقصد۔۔۔اللہ کا تقویٰ ۔دسمبر99۔2تا3۔
ظفر علی راجا ڈاکٹر۔ذاتی معاملہ اور قانون ۔جولائی96۔2تا5۔
محمود الرحمٰن فیصل ڈاکٹر ۔چیچنیا ۔۔۔جہاد آزادی ۔جنوری95 2تا9۔
محمود الرحمٰن فیصل ڈاکٹر ۔مالاکنڈ میں نفاذ شریعت کی حقیقت ۔مارچ 95۔2تا12۔
  • جون
1983
اکبر رحمانی
ماہنامہ 'محدث' لاہورمدیر اعلیٰ: حافظ عبدالرحمٰن مدنی قیمت عام شمارہ: دو روپے، زر سالانہ 20 روپے ملنے کا پتہ: 99۔ جے ماڈل ٹاؤن ، لاہوراس الحاد اور مادیت کے دور میں ایک خالص علمی و دینی رسالے کی اشاعت خاصا مشکل کام ہے۔ ''مجلس التحقیق الاسلامی'' لاہور کا یہ ترجمان دسمبر 1970ء سے نہایت پابندی سے شائع ہورہا ہے۔ نفیس کتابت، آفسٹ کی حسین طباعت، کاغذ سفید اور سرورق اعلیٰ، آرٹ پیٹر رنگین ، سائز 8؍02x26
  • جنوری
2001
شفیق کوکب
ابوالکلام آزاد،مولانا دسمبر رمضانُ المبارک اورتین قسم کے لوگ ۲ تا ۱۳
ثریا علوی، پروفیسر جولائی بیجنگ پلس فائیو کانفرنس ۲ تا ۱۲
ڈاکٹر ظفر علی راجا فروری سود کی عدالتی ممانعت کے بعد...! ۲تا 4
  • جولائی
1987
ادارہ
تحقیق شرط لازم ہے: اصطلاحاً ''وہابی' نام رکھنا، نسبت و اعتقاد کے لحاظ سے اسی طرح غلط ہے جس طرح شیخ محمد اور ان کے متبعین کی طرف منسوب نظریات غلط تھے اور ان لوگوں نے اس سے براءت ظاہر کی ہے۔ سلفی عقیدے کے متلاشی دین اسلام کے دونوں سرچشموں: کتاب اللہ اور سنت رسول اللہ ﷺ کی ہدایات کا مقصد زیادہ بہتر سمجھتے ہیں، اس لیے یہ لقب ان لوگوں کے لیے ناگوار خاطر نہیں ہے کیونکہ وہ سمجھےا ہیں کہ جس
  • مارچ
2008
انور غازی
''ذرادائیں بائیں نظر دوڑائیں تو آپ کو معلوم ہوجائے گا کہ ہم کس طرف جارہے ہیں ؟ بادیٔ النظر میں آپ کو یہ ہرگز معلوم نہیں ہوگا کہ جس ملک میں آپ رہ رہے ہیں ، اس میں اندر ہی اندر ایک مسلسل جنگ چل رہی ہے، لیکن تھوڑا سا ذرا غور کرنے سے آپ جان جائیں گے کہ ایک جنگ جاری ہے اور اس میں ہمیں اپنا دفاع کرنا ہوگا۔
  • ستمبر
2008
ادارہ
38 برس سے لاہور میں علومِ کتاب وسنت کی معیاری تعلیم دینے والی درسگاہ جامعہ لاہور الاسلامیہ میں تعمیراتی اِقدامات اور تعلیمی اِصلاحات کا عمل ایک تسلسل سے جاری ہے۔ یہاں مڈل کے بعد داخل ہونے والے طالب علم کو 8برسوں میں 20 علومِ اسلامیہ میں مہارت کے لئے خصوصی تعلیم دینے کے ساتھ ساتھ شام کی شفٹ میں سکول کی لازمی تعلیم بھی دی جاتی ہے
  • ستمبر
2006
ادارہ
'محدث' جون 2006ء کا مستقل شمارہ حدود قوانین کے خلاف میڈیا مہم کے جوابات پر مشتمل تھا جبکہ گذشتہ شمارے میں تفصیل سے حکومت کی مجوزہ ترامیم پر شرعی وقانونی نقطہ نظر پیش کیا گیا زیر نظر شمارے میں شائع ہونے والا جائزہ دراصل اس بل کا ہے جو 21؍اگست کو باقاعدہ قومی اسمبلی میں پیش کیاگیا اور اسے مجلس عمل نے پھاڑ کر اس پر بحث کرنے سے ہی انکار کردیا۔
  • نومبر
0
ادارہ
زیر نظر مقالہ مختلف حلقوں کی طرف سے ''اسلام کے سیاسی نظام'' کے بارے میں پیش کردہ افکار کا ایک جائزہ ہے مقالہ کی تیاری میں جو نکات پیش نظر رہے ان کی طرف اشارہ ضروری ہے تاکہ بعض مشہور شخصیتوں کا باہمی مختلف نکتہ نظر قارئین کے لیے تشویش کا باعث نہ ہو۔جناب انور طاہر صاحب نے ''اسلام کے سیاسی نظام '' کے بارے میں جملہ پیش کردہ افکار کو کتاب و سنت پر پیش کرکے ، اس سے مطابقت یا عدم مطابقت کو معیار بنایا ہے۔ اس سلسلے میں حضرت علی کرم اللہ وجہہ کا یہ مقولہ ہی ان کی منہاج فکر ہے۔
  • جون
1981
انور طاہر
سلام کے دینِ کامل ہونے میں تو کسی مسلمان کو کوئی شک نہیں۔ لیکن جب بھی اسلام کے سیاسی نظام (خلافت و امت) کے حوالے سے عصر حاصر میں مقبول سیاسی نظام (جمہوریت) کی نفی کی جاتی ہے تو اپنی مسلمانی پر فخر کرنے والوں کے چہرے سوالیہ نشان بن جاتے ہیں۔ یہ سوالیہ نشان دراصل دشمنوں کی اس کوشش کی کامیابی کی علامت ہے۔ جو انہوں نے مسلمانوں کو اسلام سے متصادم نظریات تسلیم کرانے کے لئے کی ہے۔ جس کے نتیجے میں دورِ حاضر کے مسلمان اسلام کو دین کامل قرار دینے کے باوجود شعوری یا غیر شعوری طور پر ان تصورات پر کامل یقین کو بھی جزوِ ایمان سمجھ بیٹھے ہیں، جن پر ایمان لانے کے بعد اسلام کی اساس (توحید و رسالت) کم از کم عمل کی جان نہیں بنتی۔
  • مارچ
2005
سیف اللہ سپرا
دنيا ميں اس وقت زمينوں كى بجائے ذہنوں پر حكومت كى جاتى ہے اور ابلاغى قوت كے بهر پور استعمال سے افراد اور حكومتوں كى كايا پلٹى جاتى ہے-اس ابلاغى قوت كا بهرپور استعمال جس طرح يہودى كرتے ہيں، افسوس كہ مسلمانوں كو اس كا ادراك وشعور نہيں-دنيا كے مالدار لوگ اگر مسلمان ہيں تو ان كى دولت سے بهى فائدہ غير مسلم ہى اُٹهاتے ہيں جو صرف تحفظ كے نام پر يورپى بنكوں ميں پڑى گلتى سٹرتى ہے جس سے يا تو مغربى معيشت ترقى كرتى ہے يا پهر اس دولت كو امن عالم كو درپيش خطرہ كے نام پر منجمد كركے ہضم كرليا جاتا ہے-
  • جون
2009
ادارہ
آج پاکستان خاک و خون میں نہا رہا ہے۔ ہر طرف آگ لگی ہوئی ہے۔ دیکھنا یہ ہے کہ ہمارادشمن کون ہے۔ جب تک یہ تعین نہیں کرتے۔ ہم حالات کاصحیح جائزہ نہ لے سکیں گے۔ مندرجہ ذیل حقائق کو مدنظر رکھیں : جب سوات آپریشن شروع ہوا۔ ہمارے صدر امریکہ میں تھے۔اس کے بعد برطانیہ کے گورڈن براؤن کے ساتھ معانقے ہورہے تھے۔فرانس کے صدر کے ساتھ دوستیاں بڑھائی جارہی تھیں ۔
  • اپریل
2003
ادارہ
(1) محدث کے سائز میں تبدیلی :۳۰، ۳۵ برس سے ماہنامہ 'محدث'جس سائز میں شائع ہوتا رہا ہے، طباعتی رجحانات میں تبدیلی کے باعث اس سائز کاحصول اَب مشکل ہوگیا ہے۔ 26/8×20 سائز کا کاغذ جہاں چند سالوں سے مارکیٹ میں آنا بند ہوگیا ہے، وہاں اس سائز پر اُٹھنے والی طباعت اور جلد بندی کی لاگت میں بھی اضافہ ہو گیا ہے اور وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ کتابوں کیلئے بھی یہ سائزمتروک ہو گیا۔
  • مئی
2009
ادارہ
سوات میں نفاذِ عدل کے حوالے سے 'ملی مجلس شرعی' کا اجلاس 27؍ اپریل 2009ء بروز پیر بعد نمازِ مغرب جامعہ نعیمیہ، لاہور میں منعقد ہوا جس میں تمام مکاتبِ فکر اور مسالک کے نمائندہ علمائے کرام نے بڑی تعداد میں شرکت کرتے ہوئے مشترکہ اعلامیہ کی منظوری دی۔اجلاس میں مولانا ڈاکٹر محمد سرفراز نعیمی (جامعہ نعیمیہ)، مولانا حافظ عبد الرحمٰن مدنی (جامعہ رحمانیہ)،
  • ستمبر
2006
ادارہ
''حکومت کی دعوت پر آنے والے علماء کرام نے آغاز میں ہی یہ طے کرلیا تھا کہ دو تین اُصولی اور اہم اُمور کو پہلے زیر بحث لایا جائے، اگر حکومت ان کے بارے میں ہماری بات قبول کرنے کو تیارہو تو باقی اُمور پر بات کی جائے ورنہ مسودۂ قانون پر مزید بات کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ ان میں تین باتیں ہمارے نزدیک زیادہ اہمیت رکھتی ہیں
  • جولائی
2005
ادارہ
1. اس وقت صف ِ اوّل كے جو چند علمى، دينى اور اصلاحى ماہنامے پاكستان سے شائع ہوتے ہيں ماہنامہ 'محدث' لاہور ان ميں سے ايك ہے- اس رسالے ميں جو عمدگى ہے، وہ اس كى زندہ مسائل پر اسلامى نقطہ نظر سے وقيع رہنمائى ہے- ابهى جو نيا فتنہ 'عورت كى امامت كا' اسلام دشمن گروہ نے اُٹهايا ہے، ماہ جون كا پورا شمارہ اسى قضيے كے لئے مختص كيا گيا ہے اور اس مسئلے كے ہر گوشے پر سير حاصل بحث كى گئى ہے۔